کیا پاکستانی معاشرہ بغاوت پر اتر آیا؟ Is the Pakistani Society at the Verge of Revolt?

Pakistan Revolt

Pakistan Revolt

پاکستان کو قیام پذیر ہوئے تقریبا پچتھر سال ہو چکے ہیں۔ ان پچھتر سالوں میں پاکستان کے معاشرے نے بہت سے نشیب و فراز دیکھے ہیں۔ تاہم پاکستان کے معاشرے کے تقریبا تمام طبقات نے جس بات کا سب سے ذیادہ سامنا کیا ہے وہ ہے ایک نا انصاف معاشرہ۔ ایک انصاف والا معاشرہ دراصل ایسا ہوتا ہے جہاں سب لوگوں کو ان کے الہامی حقوق و ذمہ داریوں سے ریاست کی جانب سے نہ صرف آگاہی دی جاتی ہے بلکہ ریاستی ادارے اور انتظامیہ ان الہامی حقوق و ذمہ داریوں پر عمل داری یقینی بنانے کا موثر ترین اور قابل عمل نظام بھی بروکار لاتے ہیں۔ ریاست کا سربراہ ایک ایسا شخص ہی ہو سکتا ہے جو معاشرے میں صادق و امین کی حقیقی شہرت رکھنے کے ساتھ ساتھ الہامی علوم انصاف کو جدید ترین تقاضوں سے ہم آہنگ کرنے کی بھی اہلیت رکھتا ہو۔
تاہم پاکستان کے تمام ہی طبقات نے پاکستان کو ایک ایسے معاشرے کے طور پر پایا ہے کہ جہاں نہ ہی کسی کو اپنے حقیقی الہامی حقوق سے آگاہی ہوتی ہے نہ ہے اپنی الہامی علو م کے مطابق ذمہ داریوں کا حقیقی ادراک۔ المیہ یہ ہے کہ وہ معاشرے کے ذمہ دار لوگ جن کا کام الہامی حقوق و ذمہ داریوں کا تعین کرنا ہے ان کی توجہ شاید مادیت پرستی کی جانب انتہاء کو پہنچی ہوئی ہے۔ نتیجے کے طور پر پاکستان کا معاشرہ ایک ایسا معاشرہ بن چکا ہے جہاں انصاف کے الہامی اصولوں سے انخراف کم ترین سطح سے لے کر اعلی ترین سطح تک، ہر جگہ ہر انتہاء کو عبور کر چکا ہے۔
اس نا انصافی کی بناء پر سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ کیا پاکستان کا معاشرہ ہر سطح پر بغاوت پر تو نہیں اتر آیا کہ جو شخص الہامی اصولوں سے جتنا ذیادہ منخرف ہو چکا ہو، پاکستان کا معاشرہ قدرت سے اپنی نا انصافیوں کا بدلا لینے کے لیے ایسے ہر الہامی اصول کو پامال کرنے والے شخص کو جھوٹ اور دجل کی انتہاء پر پہنچا کر فرشتے کے روپ میں پاکستانی معاشرے کے ہر سیاہ و سفید کا والی وارث بنانے پر تل جائے کہ دراصل اس طرح پاکستانی معاشرے کے بیشتر افراد اپنے ہی معاشرے کی انتہاء کو پہنچی نا انصافیوں کا بدلہ معاشرے کو اپنے میں سے سب سے برے اور گھٹیا شخص کی سربراہی کی صورت میں دینا چاہ رہے ہوں؟ کیا پاکستانی معاشرہ بغاوت پر تو نہیں اتر آیا؟

Author

  • Freelance Accountant, Full Charge Bookkeeper, Financial Analyst, and Ex Banker with 15 Years of Professional Experience. Also a Blogger...

Related Post